Umme rubab

ام رباب کو انصاف ملنے کی امید روشن ہوگئی

Umme rubab
Umme Rubab

امِ رباب ایک کہانی ہمت کی۔۔۔
نہ جھکنے کی نہ ڈرنے کی۔۔۔

انصاف کیلئے دردر ٹھوکریں کھانے والی امِ رباب کو انصاف ملنے کی امید روشن ہوگئی۔
دادو میں تہرے قتل کیس کے مرکزی ملزم مرتضیٰ چانڈیو کی کمشور سے گرفتاری کے بعد کیس میں اہم پیش رفت متوقع ہے۔ اس سے قبل نومبر میں سندھ اور بلوچستان بارڈر کے قریب سے پولیس نے ایک اور ملزم کو گرفتار کیا تھا۔ 2 سال سے اپنے والد، دادا اور چاچا کے قاتلوں کی گرفتاری کیلئے کوششیں کرنے والی والی ام رباب اس وقت میڈیا اور خاص طرر سوشل میڈیا کی نظروں میں آئیں جب انہیوں نے چیف جسٹس کی گاڑی کے سامنے ننگے پیر کھرے ہو کر احتجاج کیا تھا، جس پر سابق چیف جسٹس آف پاکستان جسٹس ثاقب نثار نے ام رباب کے احتجاج کا از خود نوٹس لیا تھا۔ یاد رہے ام رباب کے خاندان کو جاگیردارانہ نظام کے خلاف کھڑے ہونے پر سندھ کے بااثر افراد جن کا تعلق پیپلزپارٹی سے ہے، کی جانب سے قتل کرنے کا الزام ہے۔

اپنا تبصرہ بھیجیں: