سعود آباد گرلز کالج کی سابق پرنسپل پروفیسر نسرین نگہت کا قاتل گرفتار، جرم کا اعتراف

خاتون پروفیسر کے قتل کا معمہ حل

ڈسٹرکٹ سینٹرل تھانہ شریف آباد نے بروز پیر 3 اپریل کو کارروائی کر کے ملیر سعود آباد گورنمنٹ ڈگری گرلرز کالج کی سابقہ پروفیسر نسرین نگہت کے قتل کا معمہ حل کرلیا۔

ایس ایس پی سینٹرل کےطابق مورخہ 21 اپریل 2021 کو خاتون پروفیسر نسرین نگہت زوجہ محمد عرفان کے قاتل کو گرفتار کر لیا، ملزم کی شناخت شاہدالرحمان ولد سیف الرحمان کے نام سے ہوئی

ملزم نے خاتون پروفیسر نسرین اور انکے شوہر کو شریف آباد ڈسٹرکٹ سینٹرل کے علاقے میں دوران ڈکیتی گولیاں مار کر قتل و زخمی کرنے کا اعتراف بھی کیا۔

ایس ایس پی کے مطابق پروفیسر نسرین اپنے بیٹے حسان کی شادی کے سلسلے میں خریداری میں مصروف تھی کہ دوران ڈکیتی ملزم نے فائرنگ کرکے قتل کردیا تھا جبکہ پروفیسر نسرین کے خاوند پیٹ میں گولی لگنے سے زخمی ہوگئے تھے۔

واقعے کے بعد ایس ایس پی ڈسٹرکٹ سینٹرل ملک مرتضی نے ملزمان کی گرفتاری کے لئے ٹیم تشکیل دی تھی جس کی سربراہی ایس پی لیاقت آباد ڈویژن جبکہ ایس ڈی پی او لیاقت آباد، انسپکٹر حاجی ثناءاللہ اور ایس ایچ او شریف آباد سید کامران حیدر ٹیم میں شامل تھے. جنکے انتھک کاوشوں اور تکنیکی بنیادوں پر تفتیش سے ملزم کی گرفتاری عمل میں لائی گئی۔

اپنا تبصرہ بھیجیں:

اپنا تبصرہ بھیجیں