کراچی سے پڑھا لکھا ’دہشت گرد‘ گرفتار، تعلق جسمم سے

کراچی سے پڑھا لکھا ’دہشت گرد‘ گرفتار، تعلق جسمم سے

کراچی کے علاقے ایئرپورٹ میں واقع بھٹائی آباد میں پولیس اور حساس اداروں نے مشترکہ کارروائی کر کے جسسم سے تعلق رکھنے والے ملزم کو گرفتار کرلیا۔

پولیس حکام کے مطابق گرفتار ملزم  رمیش کمار کا تعلق کالعدم تنظیم جئے سندھ متحدہ محاز(جسمم) سے ہے، جو  اعلی تعلیم یافتہ ہونے کیساتھ مختلف اقسام کے دھماکہ خیز ڈیوائس اور بم بنانے کا ماہر بھی ہے۔ ملزم کراچی میں 2010 سے 2015 تک 38 سے زائد کریکر/دستی بم حملوں کا ماسٹر مائنڈ تھا۔

پولیس کے مطابق ملزم نے دیگر ساتھیوں کے ساتھ ملکر شہر میں دستی بم حملوں سمیت معصوم شہریوں کی ٹارگٹ کلنگ اور ہڑتالوں کے دوران ہنگامہ آرائی اور سینکڑوں گاڑیاں نظر آتش کرنے کا اعتراف کیا، تفیش میں تمام دہشتگردانہ کارروائیوں کے احکامات بیرون ملک پناہ گزیں کالعدم تنظیم کے لیڈر شفیع برفت کی جانب سے ملنے کا انکشاف کیا۔

ترجمان کے مطابق کالعدم تنظیم کا لیڈر دشمن ممالک کی خفیہ ایجنسیوں کا آلہ کار بن کر سندھ خصوصا کراچی میں بدامنی پھیلانے کیلئے نوجوانوں کا اکسا کر دیشتگردانہ کارروائیوں کیلئے استعمال کرتا ہے۔گرفتار ملزم نے مزید انکشاف کیا کہ شفیع برفت ان تمام کارروائیوں کیلئے احکامات کے علاوہ فنڈز بھی بھیجتا تھا تاکہ دھماکہ خیز مواد بنانے کیلئے سامان کی خریداری اور تنظیم کے دیگر کارندوں کی مالی معاونت کر سکے۔

گرفتار ملزم سے دھماکہ خیز مواد، تاریں، دستی بم، موبائل فون اور شناختی کارڈ برآمد ہوا، رمیش کمار سے ملنے والی معلومات کی روشنی میں مزید اہم گرفتاریوں کا بھی امکان ہے۔

اپنا تبصرہ بھیجیں: