اسکول کھلتے ہی اہم بیٹھک، سندھ کے اسکولز و کالجز کے حوالے سے اہم فیصلہ

سندھ کے تعلیمی اداروں میں کرونا ویکسین لگانے کا فیصلہ

کراچی: محکمہ صحت سندھ نے سندھ کے تمام سرکاری و نجی تعلیمی اداروں میں طالب علموں اور اساتذہ سمیت دیگر ملازمین کو کرونا سے بچاؤ کی ویکسین لگانے کا اعلان کردیا۔

وزیر صحت سندھ ڈاکٹر عذرا پیچوہو اور وزیر تعلیم سندھ سید سردار شاہ کی مشترکہ صدارت میں اہم اجلاس ہوا، جس میں پارلیمانی سیکریٹری صحت قاسم سومرو، سیکریٹری صحت کاظم جتوئی، سیکریٹری تعلیم اکبر لغاری و دیگر افسران نے بذریعہ وڈیو لنک شرکت کی۔۔

اجلاس میں کیے گئے فیصلے

نجی و سرکاری تعلیمی اداروں میں ویکسینیشن کا مرحلہ 6 ستمبر سے شروع کیا جائے گا۔

نویں جماعت سے بارویں جماعت تک کے 14 لاکھ 200 طلبہ و طالبات کی ویکسینیشن کی جائے گی۔

اسکولوں اور کالجوں میں ویکسینیشن کے لیے محکمہ صحت کی 2 ہزار 527 ٹیمیں حصہ لیں گی۔

پہلے مرحلے میں ویکسین ڈسٹرکٹ سطح پر ہوگی جسے بعد میں تعلقہ سطح تک بڑھایا جائے گا۔

اسکول انتظامیہ بچوں کے والدین سے رابطہ کر رضامندی لیں گے۔

وزیر صحت کی ہدایت

صوبائی وزیر صحت ڈاکٹر عذرا پیچوہو نے ہدایت کی کہ ویکسینیشن کے لیے بچوں کے والدین کو اعتماد میں لے کر رضامندی لی جائے، ویکسین مکمل ہوجانے کی صورت میں رجسٹریشن کو بھی یقینی بنایا جائے۔

وزیر تعلیم کی یقین دہانی

صوبائی وزیر تعلیم سید سردار شاہ نے یقین دہانی کرائی کہ اسکولوں میں ویکسین کے لیے تمام انتظامات کے حوالے سے محکمہ صحت کے ساتھ ہیں۔ تدریسی عمل کے تسلسل اور بچوں کی حفاظت کے لیے ویکسین کروانا لازمی ہوگا۔

اجلاس میں موجود شرکا کو بتایا گیا کہ محکمہ صحت کی طرف سے 6 دن کے اندر انتظامات مکمل کر کے ویکسین کا آغاز کیا جائے گا۔

اپنا تبصرہ بھیجیں: