ڈاکٹر عمران فاروق کیس، پیر تک دلائل مکمل کرنے کی مہلت، کیس جلد ختم کرنا ہے، عدالت

ڈاکٹر عمران فاروق کیس، پیر تک دلائل مکمل کرنے کی مہلت، کیس جلد ختم کرنا ہے، عدالت

اسلام آباد: ڈاکٹر عمران فاروق قتل کیس میں سزا کے خلاف دائر ملزمان کی اپیلوں پر سماعت ہوئی، جس میں ڈپٹی اٹارنی جنرل خواجہ امتیاز نے آج بھی دلائل پیش کیے۔ عدالت نے ڈپٹی اٹارنی جنرل کو پیر تک دلائل مکمل کرنے کی ہدایت کرتے ہوئے کہا کہ ہمیں کیس کا فیصلہ جلدی کرنا ہے۔

چیف جسٹس اطہر من اللہ اور جسٹس عامر فاروق نے کیس کی سماعت کی، جس میں ڈپٹی اٹارنی جنرل خواجہ امتیاز عدالت میں پیش ہوئے اور انہوں نے بتایا کہ ملزمان کے نام سے بینکوں میں اکاؤنٹس کھولے گئے، جن  کی تفصیلات پیش کرنا چاہتا ہوں۔

انہوں نے بتایا کہ ان اکاؤنٹس میں اس مقصد کے لیے یو کے پیسے بھیجے گئے ، یوکے میں اکاؤنٹ کھولے گئے، ملزم معظم کے نام پر اکاؤنٹس کھول کر فنڈز جاری کیے گئے، اس میں ایک بڑی کمپنی کا نام ہے، فنڈ کاشف نامی شخص کے نام بھی گئے، پچیس لاکھ روپے معظم کے اکاؤنٹس میں جمع ہوئے۔

ڈپٹی اٹارنی جنرل نے بتایا کہ ملزمان کی ٹریول ہسٹری بھی موجود ہے، یکم اگست کو اکاؤنٹس سے سترہ لاکھ روپے نکالے گئے، ملزمان کو باہر بھیجا گیا صرف اس اقدام کے لیے کوئی پڑھائی کا معاملہ نہیں تھا، ملزمان نے اکاؤنٹس سے پیسے نکلواتے ہی اپنا کام کردیا، ہمارے پاس چارٹ موجود ہے جس میں تمام تفصیلات ہیں۔

ڈپٹی اٹارنی جنرل نے بتایا کہ چھ بار چار ، چار دن کا تفتیشی افسر نے ریمانڈ لیا، ہیر تک اپنے دلائل مکمل کر لیں تاکہ اس کو جلد ختم کریں۔ عدالت نے کیس کی سماعت پیر تک ملتوی کردی۔


نوٹ: آپ اپنی خبریں، پریس ریلیز ہمیں ای میل zaraye.news@gmail.com پر ارسال کرسکتے ہیں، علاوہ ازیں آپ ہمیں اپنی تحاریر / آرٹیکل اور بلاگز / تحاریر / کہانیاں اور مختصر کہانیاں بھی ای میل کرسکتے ہیں۔ آپ کی بھیجی گئی ای میل کو جگہ دی جائے گی۔

ٹویٹر: twitter.com/zarayenews

فیس بک: facebook/zarayenews

انسٹاگرام : instagram/zarayenews

یوٹیوب: @ZarayeNews

اپنا تبصرہ بھیجیں: