تحریک انصاف میں میرٹ اور جمہوریت کا کچا چٹھا کھل گیا

راولپنڈی: تحریک انصاف میں میرٹ اور جمہوریت کا کچا چٹھا کھل کر سامنے آگیا۔


راولپنڈی میں میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے چیئرمین سیٹیزن ایکشن کمیٹی اور سٹی جنرل سیکریٹری پی ٹی آئی ظہیر اعوان نے انکشاف کیا کہ موجودہ تحریک انصاف ماضی سے بہت مختلف ہے کیونکہ عمران خان اقتدار سے پہلے کہتے تھے تنظیم سازی کیلے انٹرا پارٹی الیکشن ہوگا لیکن راتوں رات پارٹی عہدوں کی من پسند لوگوں میں تقسیم سمجھ سے باہر ہے۔

ظہیراعوان نے سابق سٹی جنرل سیکرٹری نے تحریک انصاف کی نئی تنظیم سازی پرردعمل دیتے ہوئے کہا کہ عمران خان اقتدار سے پہلے میرٹ انصاف کی بالادستی اورموروثی سیاست کے خاتمے کی باتیں کرتے تھے اور سیاسی پارٹیوں میں جمہوریت جمہوریت کی باتیں کرتے تھےلیکن بدقسمتی سے آج تک اپنی پارٹی کے اندر جمہوریت بحال نہیں کرسکے اور نہ ہی میرٹ انصاف کی بالادستی قائم کرسکے۔

انہوں نے کہا کہ موروثی سیاست میں بھی تحریک انصاف نے ریکارڈ قائم کیا ہے عام انتخابات اور اس کے بعد ضمنی الیکشن بلدیاتی انتخابات میں میرٹ انصاف کے برعکس و ڈیروں سرمایہ داروں جاگیرداروں اور الیکٹیبلز کو ٹکٹ دئیے گئے اور پھر موروثی سیاستدانوں کو ٹکٹوں سے نوازا گیا یہ کونسے جمہوریت اور جمہوری پارٹی ہے جہاں گزشتہ 25 سالوں سے راتوں رات تنظیم توڑ کر نئی تنظیم بنا دی جاتی ہے۔

اعوان نے کہا کہ بدقسمتی سے پاکستان میں تمام بڑی سیاسی جماعتوں میں میرٹ انصاف نام کی کوئی چیز نہیں سب اپنے بچوں اور سرمایہ داروں صعنت کاروں وڈیروں کو پارٹی عہدے اور ٹکٹیں دیتے ہیں اور بات جمہوریت اور غریب عوام کی کرتے ہیں۔

اپنا تبصرہ بھیجیں: