ٹیم بے قصو ر، شکست کی ذمہ د ار ی قبو ل کر تا ہو ں، با بر اعظم

کراچی:قومی ٹیم کے کپتان بابر اعظم نے کہا ہے کہ انگلینڈ سے سیریز میں اپنی ٹیم کا دفاع کرتے ہوئے شکست کی ذمہ داری قبول کرتا ہوں، بولرز کی انجریز اور نئے کھلاڑیوں کو موقع دینے کے باعث شکست ہوئی، سینئر کھلاڑی کے لیے ٹیم واپسی کا دروازہ بند نہیں۔

بابر اعظم نے ان خیالات کا اظہار انگلینڈ کے خلاف کراچی ٹیسٹ میں شکست کے بعد نیشنل اسٹیڈیم میں ایک پریس کانفرنس میں کیا۔

قومی ٹیم کے قائد نے کہا کہ بطور کپتان بہت مایوس ہوں، فاسٹ بالرز کی فٹنس نہ ہونے کی وجہ سے سیریز ہارے۔ میں اپنی ٹیم کا دفاع کروں گا اور سیریز میں شکست کی ذمہ داری بطور کپتان لوں گا۔

انہوں نے کہا کہ شاہین آفریدی، حسن علی، حارث رؤف اور نسیم شاہ انجری کا شکار تھے جس کی قیمت ہمیں سیریز میں وائٹ واش کی صورت میں ادا کی گئی۔ بابراعظم نے مزید کہا کہ ہمیں اپنے تیز گیند بازوں کا خیال رکھنے کی ضرورت ہے، اگلے سال 2023 کا ورلڈکپ ہے۔ ٹیسٹ میچز میں تجربے کی ضرورت ہوتی ہے لیکن ہمارے پاس صرف اظہر علی تجربہ کار کھلاڑی کے طور پر ٹیم میں شامل تھے، نئے کھلاڑیوں کو موقع دیا آگے بھی مزید مواقع دینے کی کوشش کریں گے۔

انہوں نے کہاکہ تین سے چار ڈیبیو ہوئے جب کہ ٹیسٹ میں تجربہ کار کھلاڑیوں کی ضرورت ہے۔ بابراعظم نے کہا کہ پہلی اننگز میں جلد وکٹیں گرنے سے میچ ہاتھ سے نکل گیا، ہمارے بولرز نے اچھی بولنگ کی اور فائٹ بیک کیا۔

اگلے میچز میں غلطیوں پر قابو پانے کی کوشش کریں گے۔ سرفراز اور فواد عالم کو نہ کھلانے کے سوال پر بابراعظم نے کہا کہ کسی بھی سینئر کھلاڑی کے لیے ٹیم واپسی کا دروازہ بند نہیں، ہم منصوبہ بندی کریں گے اور دیکھیں گے کہ کن کھلاڑیوں کو منتخب کرنا ہے۔

اپنا تبصرہ بھیجیں: