ایم کیو ایم میں مصطفیٰ کمال، انیس قائم خانی اور فاروق ستار کو کیا ذمہ داریاں دی جائیں‌ گی؟

کراچی: مہاجر سیاست کی سوچ رکھنے والوں کے ایم کیو ایم پاکستان میں انضمام کے بعد ڈاکٹر خالد مقبول صدیقی کی زیر صدارت رابطہ کمیٹی کا اہم طویل اجلاس ہوا، جس میں مصطفیٰ کمال، انیس قائم خانی اور فاروق ستار نے شرکت کی اور تینوں رہنماؤں کو ذمہ داریاں دینے کے حوالے سے بھی بات کی گئی۔

کراچی( اسٹا ف رپورٹر)سید مصطفی کمال ،انیس قائم خانی اور فاروق ستار کی شمولیت کے بعد ایم کیوایم پاکستان رابطہ کمیٹی کا اہم اجلاس ہوا جس کی صدارت خالد مقبول صدیقی نے کی، اجلاس میں بلدیاتی الیکشن کے حوالے سے تبادلہ خیال کیا گیا اور عدالت عظمی کے فیصلے کاانتظار کر کے جمعے کی شام پھر اجلاس طلب کیا گیا جس میں آئندہ کا لائحہ عمل طے کیا جائے گا۔

ایم کیوایم کے عارضی مرکز بہادر آباد میں اجلاس منعقد کیا گیا۔ جس میں مصطفی کمال ، انیس قائم خانی، فاروق ستار، وسیم اختر، عامر خان ، خواجہ اظہار الحسن ، امین الحق، فیصل سبزواری سمیت دیگرارکان موجود تھے۔

خالد مقبول صدیقی نے مصطفی کمال ، انیس قائم خانی اور فاروق ستار کو خوش آمدید کہا اور اہم امورپر مشاورت بھی کی زرا ئع کا کہنا ہے کہ اجلاس میں بلدیاتی الیکشن کے حوالے سے تبا دلہ خیا ل کیا گیا جس میں مختلف آپشنز پر غور کیا گیا۔ زرا ئع کا کہنا ہے کہ را بط کمیٹی جمعہ کو سپریم کورٹ کے فیصلے کا انتظار کر رہی ہےعدالتی فیصلے کی روشنی مین آئندہ کی حکمت عملی مرتب کی جائیں گی جبکہ ایم کیوایم حکومت سے علیحدگی کر کے اپوزیشن میں جانے سے سمیت دیگر آپشنز پرغورکررہی ہے۔

کس کو کون سی ذمہ داری ملے گی؟

ذرائع کا کہنا ہے کہ سنیئر رہنما انیس قائم خانی تنظیمی امور کی ذمے داری دیے جانے کا امکان ہے، اجلاس کے دوران انیس قائم خانی نے ایم کیو ایم سے لاتعلق ہونے والے بعض کارکنان اور سابقہ منتخب نمائندوں سے بھی رابطہ کیا ہے اور ساتھ چلنے کی دعوت بھی دی۔

ذرائع کو یہ بھی پتہ چلا ہے مصطفیٰ کمال پارٹی کے انتظامی امور اور ڈاکٹر فاروق ستار کو مستقبل میں پارلیمانی اور سیاسی امور ، کی ذمہ داری دی جاسکتی ہے۔

ذرائع کا کہنا ہے کہ اجلاس میں بلدیاتی انتخاب ملتوی نہ ہونے کی صورت میں 15جنوری کو شہر بھر میں احتجاج اور دھرنے کے بارے میں بھی تبادلہ خیال کیا گیا۔ ایم کیو ایم نے ہفتے تک بلدیاتی انتخاب کے بارے میں صورت حال واضح نہ ہونے کی صورت میں وفاق میں وزارت اور حکومت کا ساتھ چھوڑنے پر بھی مشاورت کی جس کا اعلان ہفتے کو کیا جاسکتا ہے۔ اجلاس میں پنجاب اور سندھ کی صورتحال پر غور اجلاس میں ایم کیو ایم کے مستقبل میں اہم ترین اقدامات پر مشاورت کی گئی۔

اپنا تبصرہ بھیجیں: