شان مسعود کو ون ڈے اسکواڈ کا نائب کپتان بنائے جانے پر شاہد آفریدی کی تنقید

لاہور : پاکستان کرکٹ ٹیم کے سابق چیف سلیکٹر شاہد آفریدی نے شان مسعود کو ون ڈے ٹیم کا نائب کپتان بنانے کے نجم سیٹھی کے فیصلے کے خلاف بات کر دی ہے۔ جب وائٹ بال کے نائب کپتان شاداب خان کی انگلی میں فریکچر ہوا تو چیئرمین پی سی بی نے محمد رضوان، امام الحق اور فخر زمان جیسے تجربہ کار کھلاڑیوں کے مقابلے اوپننگ بلے باز شان مسعود کا انتخاب کیا۔

نیوزی لینڈ کے خلاف سیریز سے قبل آنے والے اس فیصلے نے کرکٹ برادری میں ہلچل مچا دی تھی کیونکہ شان مسعود نے پاکستان کے لیے زیادہ ون ڈے نہیں کھیلے تھے اور وہ پہلے دو میچوں کی پلیئنگ الیون میں بھی نہیں تھے۔

شاہد آفریدی نے اپنے ایک انٹرویو میں کہا کہ ایسا فیصلہ کرنے سے پہلے سلیکشن کمیٹی سے مشاورت کی جانی چاہیے تھی اور کپتان یا نائب کپتان کے تقرر میں کارکردگی کو بنیادی خیال رکھنا چاہیے۔

انہوں نے یہ بھی نشاندہی کی کہ شان مسعود نے پاکستان کے لیے بہت سے ون ڈے نہیں کھیلے ہیں اور اس کے بجائے سینئر کھلاڑی دستیاب ہیں جن پر غور کیا جانا چاہیے تھا۔ سابق کرکٹر نے اس بارے میں بھی اپنے خدشات کا اظہار کیا کہ اس فیصلے سے ٹیم کے سینئر کھلاڑیوں کے حوصلے کیسے متاثر ہوسکتے ہیں اور کہا کہ ایک ناتجربہ کار کھلاڑی کی بطور نائب کپتان تقرری منفی اثرات مرتب کرسکتی ہے۔

اپنا تبصرہ بھیجیں: