یو این عہدیدار کا دورہ قندھار، طالبان سے بات چیت

کابل : افغان صوبے قندھار میں حکام نے اعلان کیا ہے کہ اقوام متحدہ کی خاتون ڈپٹی سیکرٹری جنرل نے صوبے کے ڈپٹی گورنر سے غیر ملکی سفیر کی غیر معمولی ملاقات میں طالبان تحریک کے رہنماؤں کے ساتھ ملک کے جنوب میں ان کے گڑھ میں ملاقات کی ہے۔

امینہ محمد جو اس ہفتے افغانستان کا دورہ کر رہی ہیں پہلے ہی کابل میں طالبان حکام، اقوام متحدہ کے عملے اور امدادی گروپوں سے ملاقات کر چکی ہیں تاکہ خواتین کے حقوق کے فروغ اور تحفظ کے طریقوں پر تبادلہ خیال کیا جا سکے۔

قندھار میں میڈیا آفس سے جاری ہونے والے ایک بیان میں کہا گیا ہے کہ صوبے کے نائب گورنر مولوی حیات اللہ مبارک نے اقوام متحدہ کی ڈپٹی سیکرٹری جنرل کو بتایا کہ طالبان انتظامیہ دنیا کے ساتھ مضبوط تعلقات قائم کرنا چاہتی ہے۔ یو این عہدیدار سے کہا گیا کہ افغان طالبان کے رہنماؤں کو پابندیوں کی فہرست سے نکالا جائے اور طالبان کو اقوام متحدہ میں نمائندہ بھیجنے کی اجازت دی جائے۔

یو این عہدیدار امینہ محمد یہ دورہ ایک ماہ سے بھی کم وقت کے بعد ہوا ہے جب طالبان حکام نے این جی اوز کے لیے کام کرنے والی خواتین عملے پر پابندی عائد کر دی تھی۔ اس پابندی سے کئی این جی اوز نے جزوی طور پر کام معطل کر دیا۔

اپنا تبصرہ بھیجیں: