ننکانہ کے واقعے پر ایم کیوایم کا اظہار تشویش

کراچی:متحدہ قومی موومنٹ پاکستان کی رابطہ کمیٹی نے ننکانہ صاحب میں مشتعل ہجوم کی جانب سے مبینہ طور پر قرآن پاک کی بے حرمتی کرنے کے الزام میں نوجوان کو تشدد کے بعد قتل کرنے کے واقع پر اپنی گہری تشویش کا اظہارکیاہے ۔

رابطہ کمیٹی نے اپنے ایک بیان میں کہا کہ مروجہ قانون کی موجودگی کے باوجود عوام نے قانون کو اپنے ہاتھ میں لیا اور نوجوان کوپولیس اسٹیشن میں گھس کر تشدد کا نشانہ بنایا اور بعد ازاں اسے نظر آتش کر دیااس قسم کے واقعات پاکستان کی قومی اور عالمی سطح پر ساکھ کو متاثر کرتے ہیں۔

رابطہ کمیٹی نے مذید کہا کہ انتہا پسندی کے ایسے واقعات کی روک تھام نہ کی گئی اور قانون سے ماوراء اقدامات ہوتے رہے تو پاکستان عالمی سطح پر مشکلات کا شکار ہو سکتا ہے لہذاایسے واقعات کی روک تھام کے لیئے حکومتی اداروں کو اپنا کردار ادا کرنا چاہیئے اور اگر کسی نے اس قسم کی حرکت کی ہے تو اسے قانون کے مطابق سزا دی جائے۔

اپنا تبصرہ بھیجیں: