فوج کو ہزاروں ایکڑ زرعی اراضی دینے پر بار کونسل کو تحفظات

پاکستان بار کونسل (پی بی سی) نے نگراں پنجاب حکومت کی جانب سے صوبے کے مختلف اضلاع میں ہزاروں ایکڑ زرعی اراضی پاک فوج کے حوالے کرنے پر شدید تحفظات کا اظہار کیا ہے۔

پی بی سی کی جانب سے پیر کو جاری کردہ ایک نوٹیفکیشن میں کہا گیا ہے کہ “فوج کو عوامی وسائل دینے کا غیر قانونی عمل پاکستانی عوام کے لیے نہ تو جائز ہے اور نہ ہی قابل قبول ہے”۔

کونسل نے 10 مارچ کو جی ایچ کیو لینڈ ڈائریکٹوریٹ کی جانب سے جاری کردہ ایک نوٹیفکیشن کا حوالہ دیا جس میں کہا گیا تھا کہ پنجاب کے مختلف اضلاع میں 45,267 ایکڑ زرعی اراضی پاک فوج کے حوالے کر دی گئی ہے۔

پی بی سی نے مطالبہ کیا کہ فوج کو زرعی اراضی کے اجراء سے متعلق “غیر قانونی نوٹیفکیشن” کو “فوری طور پر واپس لیا جائے” اور خبردار کیا کہ ایسا نہ کرنے کی صورت میں وہ متعلقہ عدالت سے رجوع کرے گی۔

بشکریہ: ایکسپریس ٹریبیون


نوٹ: آپ اپنی خبریں، پریس ریلیز ہمیں ای میل zaraye.news@gmail.com پر ارسال کرسکتے ہیں، علاوہ ازیں آپ ہمیں اپنی تحاریر / آرٹیکل اور بلاگز / تحاریر / کہانیاں اور مختصر کہانیاں بھی ای میل کرسکتے ہیں۔ آپ کی بھیجی گئی ای میل کو جگہ دی جائے گی۔

اپنا تبصرہ بھیجیں: