کورنگی میں بڑی آتشزدگی ،درجنوں باڑے جل گئے

کراچی: کورنگی الیاس گوٹھ میں آتشزدگی کے دوران درجنوں بھینسوں کے باڑے جل گئے،مویشوں کا لاکھوں روپے مالیت کا چارہ اوردیگرسامان خاکسترہوگیا۔
آگ پر3 گھنٹوں کی جدوجہد کے بعد فائربریگیڈ کی 7 گاڑیوں کی مدد سے قابو پایا گیا۔اتوارکی صبح بھینسوں کے باڑے میں خوفناک آگ بھڑک اٹھی جس نے دیکھتے ہی دیکھتے شدت اختیارکرلی اورآگ نے تیزی سے کئی باڑوں کواپنی لپیٹ میں لے لیا،باڑوں کے ملازمین نے اپنی مدد آپ کے تحت مویشیوں کو محفوظ مقام پرمنتقل کیا اورآگ پرقابو پانے کی کوشش شروع کردی۔
آگ کی اطلاع ملتے ہی فائربریگیڈ کی 2 گاڑیاں موقع پرپہنچ گئیں اورآگ پرقابو پانے کی کوشش شروع کردی تاہم آگ کی شدت اور تیزہوا کے باعث تیزی سے پھیلنے کی وجہ سے فائربریگیڈ کے عملے نے مزید گاڑیوں کو موقع پر طلب کرلیا،تیزہوا،دھویں اور واٹر بورڈ کی جانب سے بروقت واٹرٹینکر کی فراہمی نہ ہونے کی وجہ سے فائر بریگیڈ کے عملے کو آگ پر قابو پانے میں مشکلات کا سامنا کرںا پڑا، فائربریگیڈ کے عملے نے تقریباً 3 گھنٹوں کی سخت کوششوں کے بعد آگ پر قابو پالیا، آتشزدگی کے باعث درجنوں باڑے مکمل جل گئے اور ان میں موجود بھاری مالیت کا مویشیوں کا چارا ودیگرسامان جل گیا۔
باڑے کے ایک مالک کا کہناہے کہ الیاس گوٹھ میں 99 ایکٹراراضی میں 60 سے 70 باڑے واقع ہیں جو سب جل گئے ہیں، آگ پونے بارہ بجے کے قریب لگی تھی اور فائر بریگیڈ کا عملہ تقریباً ایک گھنٹے کی تاخیر سے پہنچا، انہوں نے بتایا کہ باڑوں میں آتشزدگی کے باعث ڈیری فامرز کا بڑا نقصان ہوا ہے ایک باڑے کا کم از کم پانچ لاکھ روپے کا مویشیوں کا چارہ جس میں بھوسہ، ونڈا ، دلیہ اور چوکر موجود ہوتا ہے جو سب جل گیا ہے، آگ باڑے کے سامنے کی جانب لگی تاہم تیز ہواکے باعث آگ پھیلتی چلی گئی لیکن خوس قسمتی سے ڈیری فارمرز کے مویشی محفوظ رہے ہیں۔
۔ریسکیو ٹیم کے مطابق آتشزدگی کے دوران کسی قسم کا کوئی جانی نقصان نہیں ہوا اور تمام مویشی بھی محفوظ رہے ہیں، فوری طور پر آگ لگنے کی وجوہات سامنے نہیں آسکیں۔

اپنا تبصرہ بھیجیں: