اقوام متحدہ میں نائب پاکستانی مندوب نے دنیا کو اہم خطرے آگاہ کردیا !

نیویارک: پاکستان نے قراردیا ہے کہ بین الاقوامی منظم جرائم عالمی امن اور انسانی سلامتی کیلئے اہم خطرہ ہیں۔اقوام متحدہ میں پاکستان کے نائب مستقل مندوب محمد عامر خان نے جنرل اسمبلی میں جرائم کی روک تھام اور فوجداری انصاف اور مجرمانہ مقاصد کیلئے معلومات اور مواصلاتی ٹیکنالوجی کے استعمال پر خطاب کرتے ہوئے کہا کہ پاکستان بین الاقوامی منظم جرائم سے لڑنے کیلئے رکن ممالک کے اصولی، ادارہ جاتی اور آپریشنل فریم ورک کو بہتر بنانے کیلئے UNODC کی تکنیکی مدد کیلئے اپنی مخلصانہ کوششیں جاری رکھے ہوئے ہے۔

نائب مندوب محمد عامر خان کہاکہ آج کی دنیا میں ہم اپنے آپکو تیزی سے پیچیدہ عالمی منظر نامے پر پاتے ہیں جس کی ابتدا متعدد اور متنوع چیلنجوں سے ہوتی ہے۔ دنیا کے تنازعات کی وجہ سے جبری ہجرت کے عالمی رجحان میں کردار ادا کرنے والے لاتعداد افراد کو بے گھر کرنا جاری رکھا ہوا ہے۔

نائب مندوب محمد عامر خان کہاکہ موسمیاتی تبدیلی اپنے تباہ کن اثرات کیساتھ، منظم جرائم پیشہ ور گروہوں کو کمزور قانونی نظاموں میں دراندازی کرنے کے نئے مواقع فراہم کرتی ہے، ڈیجیٹل اسپیس کی توسیع ان کو نئے مواقع فراہم کرتی ہے۔ حال ہی میں، دنیا نے نفرت انگیز جرائم، اسلامو فوبیا اور دیگر اشتعال انگیز کارروائیوں میں اضافہ دیکھا ہے جو نسل، مذہب یا عقیدے کی بنیاد پر عدم برداشت اور تشدد کو ہوا دیتے ہیں۔ ہم مذہبی اور ثقافتی عقائد کیلئے باہمی احترام کی اہمیت پر زور دیتے ہیں

نائب مستقل مندوب محمد عامر خان کاکہناتھاکہ بین الاقوامی منظم جرائم کی دیگر شکلیں، خاص طور پر منی لانڈرنگ، سائبر کرائم، بدعنوانی، انسانی سمگلنگ اورا سمگلنگ، ہمارے ممالک کیلئےبدستور زبردست چیلنجز کا باعث ہیں۔

نائب مستقل مندوب محمد عامر خان کا مزید کہنا تھاکہ پاکستان کے اینٹی منی لانڈرنگ ایکٹ 2010 کے تحت، منی لانڈرنگ اور دہشتگردوں کی مالی معاونت سے نمٹنے کیلئے ایک آزاد مالیاتی مانیٹرنگ یونٹ قائم کیا گیا ۔

اپنا تبصرہ بھیجیں: