شاہراہ فیصل پر مٹر گشت کرنے والے شیر کو ضبط کرنے کا حکم ،مالک پر جرمانہ

کراچی: عدالت نے شاہراہ فیصل پر مٹر گشت کرنے والے شیر کو ضبط کرنے کا حکم دیتے ہوئے مالک پر 3 لاکھ 12 ہزار روپے جرمانہ عائد کردیا۔

کراچی میں ایڈیشنل ڈسٹرکٹ اینڈ سیشن جج جنوبی کی عدالت میں شاہراہ فیصل پر شیر کے گشت کرنے کا کیس پر سماعت ہوئی۔

شیر کے مالک شمس الحق نے اعتراف جرم کرلیا ، جس پر عدالت نے مالک شمس الحق پر 3 لاکھ 12 ہزار روپے جرمانہ عائد کردیا۔

عدالت نے شیر بھی ضبط کرنے کا حکم دے دیاجو عدالتی حکم پر کراچی چڑیا میں ہے۔

مقدمے میں شیر کے مالک سمیت 5 افراد کو نامزد کیا گیا ہے۔29 اگست کو دوسری جگہ منتقلی کے دوران وہ شاہراہ فیصل پر نکل آیا تھا ، واقعے کا مقدمہ محکمہ وائلڈ لائف کی مدعیت میں درج ہے۔یاد رہے کراچی کی شارع فیصل پر دہشت پھیلانے والے جنگل کے بادشاہ کو پنجرے میں قید کرکے محکمہ وائلڈ لائف نے چڑیا گھر منتقل کردیا تھا۔اس کے مالک کی سوزوکی سے کچھوا بھی برآمد ہوئے ، جس پر وہ اور کچھوے کے مالک کیخلاف مقدمہ درج کرلیا گیا، ممکنہ طور پر وہ اور کچھوے کو فروخت کیلئے ڈیفنس لے جایا جارہا تھا۔مالک شمس الحق نے پولیس کو دیے جانے والے بیان میں کہنا تھا کہ اس کو ڈاکٹر کے پاس لے جا رہا تھا، 2، 3 روز سےوہ کچھ کھا نہیں رہا تھا جبکہ کچھوے کو موشن ہورہے تھے اسے بھی ڈاکٹر کو دکھانا تھا، خود ہی اس کی دیکھ بھال کرتا ہوں، زیادہ لوگ ہونے کی وجہ سے شیر گھبرایا اور قابو نہیں کرسکا۔ واقعے کا مقدمہ محکمہ وائلڈ لائف کی مدعیت میں درج ہے۔یاد رہے کراچی کی شارع فیصل پر دہشت پھیلانے والے جنگل کے بادشاہ کو پنجرے میں قید کرکے محکمہ وائلڈ لائف نے چڑیا گھر منتقل کردیا تھا۔اسے عدالتی حکم پر کراچی چڑیا میں رکھاگیاہے ۔

اپنا تبصرہ بھیجیں: