ٹرمپ کے سر کی قیمت 8 ملین ڈالر مقرر

تہران: ایرانی فورس القدس کے کمانڈر جنرل قاسم سلیمانی کی موت کے بعد ایران نے امریکی صدر کے سر کی قیمت 8 کروڑ ڈالرز مقرر کردی۔

جنرل قاسم سلیمانی کا نماز جنازہ گزشتہ روز ایران کے علاقے مشہد میں ادا کیا گیا جس میں ہزاروں کی تعداد میں لوگوں نے شرکت کی اور اپنے کمانڈر کو خراج تحسین پیش کیا، اُن کا جسد خاکی امام رضا کے روضے پر بھی لایا گیا۔

جنرل قاسم سلیمانی کے جنازے کے منتظم نے ایرانی باشندوں سے اپیل کی کہ وہ کم از کم ایک ڈالر عطیہ کریں، ایران کی آبادی اس وقت 8 کروڑ ہے، ہم ٹرمپ کو قتل کرنے والے شخص کو آبادی کی جانب سے جمع ہونے والی 80 ملین ڈالر کی رقم عطیہ کریں گے۔

یاد رہے کہ ایران ، امریکا کشیدگی اس وقت عروج پر ہے، گزشتہ دو روز سے کینیا اور بغداد میں شدت پسند تنظیموں کی جانب سے ایرانی فوجی اڈوں اور تنصیبات کو راکٹ فائر کر کے نشانہ بنایا جارہا ہے، جس کے نتیجے میں فوجی زخمی ہوئے جبکہ بکتر بند اور گاڑیاں تباہ بھی ہوئیں۔

اپنا تبصرہ بھیجیں: