مفتوی زرولی کی تنقید، مولانا طارق جمیل نے پہلی بار اپنی نسل بیان کردی

مفتوی زرولی کی تنقید، مولانا طارق جمیل نے پہلی بار اپنی نسل بیان کردی

معروف مبلغ مولانا طارق جمیل نے مفتی زرولی کی جانب سے کی جانے والی تنقید کے بعد پہلی بار اپنی نسل بیان کردی۔

اپنے یوٹیوب چینل پر شیئر کی جانے والی ویڈیو میں مولانا کا کہنا تھا کہ مفتی زرولی صاحب جیسی زبان استعمال کرتے ہیں وہ انہیں یا کسی بھی عام آدمی کو زیب نہیں دیتی، وہ گفتگو کرتے ہوئے گالیاں تک دے دیتے ہیں اور الزام تراشیاں بھی کرتے ہیں، انہوں نے مجھے زندیق کہا اور بولا کہ میں زندیقوں کا سردار ہوں جبکہ میں اہل حق کا سردار ہو جبکہ اُن کی نظر میں

انہوں نے کہا کہ ’مفتی صاحب نے میرا نسب طوائفوں (میرا) کے ساتھ جوڑا، مجھے دلی تکلیف پہنچی اور جذبات کو ٹھیس پہنچی۔ مولانا طارق جمیل کا کہنا تھا کہ مفتی زرولی نے مجھ پر الزام عائد کیا کہ میں نے ایک طوائفہ کو بیٹی بنایا، میرے لیے یہ الزام تکلیف دہ ہے۔ میں نے جو اندھیرے میں وقت گزارا اُس کے بارے میں کوئی سوچ نہیں سکتا۔ معروف مبلغ کا کہنا تھا کہ ہم راجپوت برادری کی اعلیٰ نسل چوہان سے تعلق رکھتے ہیں، ہم پرتھوی راج چوہان کی اولادیں ہیں۔ مولانا نے کہا کہ کوئی بات نہیں مفتی صاحب نے ایسی بات کی انہیں یہ تکلیف ہو۔

اپنا تبصرہ بھیجیں: