خنجر حملہ کیس:‌ متاثرہ لڑکی بااثر ملزم کے ساتھ بیٹھنے پر مجبور

لاہور میں خنجرسے حملہ کرنے والا کلاس فیلو اور اس کے وار سے زخمی ہونے والی قانون کی طالبہ خدیجہ ایک چھت کے نیچے امتحان دیں گے۔

خدیجہ صدیقی قانون کی ایک طالبہ ہے۔ ساتھی طالب علم شاہ حسین سے اس کی ملاقات ہوئی اور پھر کچھ بات چیت ہوئی۔ شاہ حسین کے رویے میں جارحانہ عناصر دیکھ کر خدیجہ نے اس سے گریز مناسب سمجھا۔ مگر شاہ حسین نے اسے انا کا مسئلہ بنا لیا۔

ایک روز خدیجہ اپنی چھوٹی بہن کو اسکول سے لے کر آ رہی تھی کہ شاہ حسین سامنے آیا اور خدیجہ پر چھری سے23 وار کیے۔ اس دوران ایک راہ گیر نے واقعے کی وڈیو بھی بنالی۔

معاملہ عدالت میں گیا تو وڈیو بھی عدالت میں پیش کی گئی۔ ملزم سامنے تھا، مگر ضمانت پر رہا کر دیا گیا۔اب مظلوم خدیجہ اور ظالم کلاس فیلو دونوں ایک ہی چھت کے نیچے قانون کا پرچہ دیں گے۔

خدیجہ نے بتایا ہے کہ ملزم وکیلوں کے ایک بااثر خاندان سے تعلق رکھتا ہے اس لیے آزاد ہے۔

بشکریہ روزنامہ جنگ

اپنا تبصرہ بھیجیں: