ویسٹ‌ انڈیز کو شکست:‌ پاکستان نے نئی تاریخ‌ رقم کردی

ڈومینیکا کے ونڈسر سٹیڈیم میں کھیلے جانے والے تیسرے اور آخری کرکٹ ٹیسٹ میچ کے آخری دن پاکستان نے سنسنی خیز مقابلے کے بعد ویسٹ انڈیز کو 101 رنز سے شکست دے دی ہے۔

ویسٹ انڈیز کی پوری ٹیم دوسری اننگز میں 304 رنز کے ہدف کے تعاقب میں 202 رنز بنا کر آؤٹ ہو گئی۔

پاکستان کی اس جیت میں کئی بار اعصاب شکن مراحل آئے۔ ایک مرحلے پر ایسا محسوس ہوتا تھا کہ ویسٹ انڈیز کی ٹیم یہ میچ ڈرا کرنے میں کامیاب ہو جائے گی تاہم پاکستان نے سکینڈ لاسٹ اوور میں کامیابی حاصل کی۔

مصباح الحق اور یونس خان

ویسٹ انڈیز کے آؤٹ ہونے والے آخری بیٹسمین شینن گیبریئل تھے جنھیں یاسر شاہ نے بولڈ کر کے پاکستان کو تاریخ ساز کامیابی دلائی۔

پاکستان کے سپنر یاسر شاہ کو مین آف دی سیریز قرار دیا گیا، انھوں نے اس سیریز میں 25 وکٹیں حاصل کیں۔

اس فتح کے ساتھ ہی پاکستان نے ویسٹ انڈیز کی سر زمین پر پہلی مرتبہ سیریز جیتنے کا اعزاز حاصل کر لیا اور ساتھ ساتھ اپنے کریئر کا آخری میچ کھیلنے والے یونس خان اور کپتان مصباح الحق کو بھی یادگار انداز میں رخصت کیا۔

کرکٹ

مہمان ٹیم کی جانب سے روسٹن چیز نے شاندار اننگز کھیلتے ہوئے 101 رنز بنائے اور آؤٹ نہیں ہوئے تاہم ان کی یہ اننگز بھی ویسٹ انڈیز کو شکست سے نہ بچا سکی۔

پاکستان کی جانب سے دوسری اننگز میں یاسر شاہ نے پانچ، حسن علی نے تین، جب کہ محمد عامر اور محمد عباس نے ایک، ایک کھلاڑی کو آؤٹ کیا۔

کرکٹ

اس سے پہلے میچ کے چوتھے دن پاکستان نے ویسٹ انڈیز کے خلاف 174 رنز آٹھ کھلاڑی آؤٹ پر دوسری اننگز ڈکلیئر کر دی۔

مہمان ٹیم کی جانب سے یاسر شاہ نے اور محمد عامر نے آٹھویں وکٹ کے لیے 61 رنز کی اہم شراکت قائم کی۔

اس سے پہلے ویسٹ انڈیز کی ٹیم اپنی پہلی اننگز میں 247 رنز بنا کر آؤٹ ہو گئی جس کے نتیجے میں پاکستان کو 129 رنز کی برتری حاصل ہوئی۔

Image may contain: 14 people, people smiling, outdoor

بدھ کو شروع ہونے والے اس ٹیسٹ میچ میں ویسٹ انڈیز نے ٹاس جیت کر پاکستان کو پہلے کھیلنے کی دعوت دی تھی۔

اپنا تبصرہ بھیجیں: