کابل دھماکا:‌ افغانستان اور پاکستان کے کرکٹ‌ تعلقات منسوخ

افغانستان کے دارالحکومت کابل میں گذشتہ روز غیر ملکی سفارت خانوں کے پاس ہونے والے خود کش حملے کے بعد افغانستان کرکٹ بورڈ (اے سی بی) نے پاکستان کے ساتھ مجوزہ دوستانہ کرکٹ میچ منسوخ کرنے کا اعلان کیا ہے۔

افغانستان کرکٹ بورڈ کے چیئرمین شكراللہ عاطف مشعل نے ایک پریس کانفرنس میں پاکستان کے ساتھ مجوزہ دوستانہ میچوں کے منسوخ ہونے کی معلومات فراہم کیں۔

مشعل نے کہا کہ پاکستان افغانستان کی کرکٹ ٹیم کو اپنی سرزمین پر کھیلنے کے لیے مسلسل دعوت دے رہا تھا۔ انھوں نے کہا کہ کرکٹ میچ کے لیے اسی پہلو پر غور کر کے فیصلہ کیا گيا تھا۔

انھوں نے بتایا کہ پاکستان کے ساتھ کرکٹ پر کوئی بھی سمجھوتہ قومی مفاد کے تناظر میں ہی کیا جائے گا۔ ان کا کہنا تھا کہ پاکستان جانے سے متعلق کوئی بھی فیصلہ نہیں کیا گيا ہے۔

کرکٹ منسوخ کرنے سے متعلق اے سی بی کی ٹویٹ

اسی حوالے سے افغانستان کرکٹ بورڈ (اے سی بی) نے پاکستان کے ساتھ دوستانہ کرکٹ میچ منسوخ کرنے کا اعلان اپنے سرکاری ٹویٹر اکاؤنٹ پر بھی کیا۔

افغانستان کرکٹ بورڈ نے اپنی ٹویٹ میں کہا ہے: ‘پاکستان کے ساتھ دوستانہ کرکٹ میچوں، جس میں دونوں ممالک کے درمیان باہمی کرکٹ کے تعلقات پر ابتدائی رضامندی ظاہر کی گئی تھی، کو منسوخ کر دیا گیا ہے.’

اس سے ٹویٹ کے ساتھ اے سی بی نے کابل دھماکے کی ٹوئٹر (#kabulblast) بھی استعمال کیا ہے۔

یہ اس جانب اشارہ ہے کہ کابل میں ہونے والے دھماکے کے پس منظر میں یہ فیصلہ کیا گيا ہے۔

اپنا تبصرہ بھیجیں: