پھلوں کی خریداری، اہلیان کراچی مہم کے لیے پرعزم، محبوب چشتی

کراچی: ماہ صیام کے بابرکت اور مقدس مہینے میں کراچی میں مہنگے اور من مانے نرخوں پر فروٹ کی فروخت جاری ہے اور فروٹ فروشوں نے کمشنر کراچی کی جانب سے جاری کردہ نرخ ناموں کو فروٹ کی پیٹی میں ڈال کر اپنی مرضی کے نرخ متعین کئے ہوۓ ہیں-

اس سلسلے میں سوشل میڈیا میں آگاہی مہم کا آغاز گزشتہ دنوں “آواز صارف” کے نام نے کیا اور یہ آگاہی مہم کراچی کے علاوہ پورے پاکستان میں تیزی سے جاری ہے اس آگاہی مہم کو صرف دو لوگوں نے اجاگر کیا  جو دیکھتے ہی دیکھتے عوام میں بہت مقبول ہوئی،

کراچی کی عوام سے “آواز صارف” نے یہ اپیل کی ہے کہ صرف 3 دن تک فروٹ خریدنے کا بائیکاٹ کیا جائے جس سے خود بہ خود پھل فروش مافیا نرخوں میں کمی کرنے پر مجبور ہوجائیں گے-

آواز صارف کی چئیرپرسن کا کہنا ہے کہ ماہ رمضان میں روزہ ہر مسلمان پر فرض ہے اور جو لوگ متوسط طبقے سے تعلق رکھتے ہیں وہ اتنے مہنگے نرخوں پر پھل نہیں خرید سکتے اور جو صاحب ثروت طبقہ ہے وہ بآسانی فروٹ خرید سکتا ہے اس لئے اہلیان کراچی سے آواز صارف نے یہ اپیل کی ہے کہ 3,2 اور4 جون کو فروٹ خریدنے کا مکمل بائیکاٹ کیا جائے-

آواز صارف ہر اس شخص کی آواز ہے جو مسائل میں گھرا ہے- آواز صارف آگاہی کا سلسلہ اب سوشل میڈیا کے علاوہ گلی گلی میں لوگوں کی زبانوں تک پہنچ رہا ہے اور عوامی حلقوں کے مطابق %80 سے زائد شہریوں نے کراچی اور دیگر شہروں میں 3 دن کے پھل بائیکاٹ میں حصہ لینے کے لئے حامی بھری ہے اور اس آگاہی مہم کو سراہا ہے-

انہوں نے لوگوں سے اپیل کی کہ سوشل میڈیا پر درج ذیل ہیش ٹیگ کے ساتھ اپنی تصاویر، ویڈیو پیغامات شیئر کریں

#BoycottFruits

#KarachiDecide

#KarachiStand

#مہنگے_پھل_نامنظور

اپنا تبصرہ بھیجیں: