پھلوں کی خریداری:‌ بائیکاٹ‌ شروع ہونے سے قبل کامیاب

کراچی: پھلوں کی خریداری کا بائیکاٹ، عوام کے ساتھ سیاست دان بھی مہنگائی سے تنگ، سب نے آواز صارف کی آواز پر لبیک کہنا شروع کردیا۔

تفصیلات کے مطابق منافع خور پھل فروشوں کے خلاف آواز صارف کی سوشل میڈیا اور فیس بک سے چلنے والی مہم عوام میں تیزی سے مقبول ہوئی اور ہر شخص نے اس میں اپنا حصہ ڈالنے کی رضا مندی ظاہر کی۔

شہریوں نے آج سے آئندہ دو روز تک پھلوں کی خریداری کا بائیکاٹ کردیا تو دوسری جانب پھل فروش اور ریڑھی بان بھی پریشان نظر آرہے ہیں، پولیس اہلکار تو اس مہم کا حصہ بن ہی چکے مگر اب اے این پی کے سینیٹر اور تحریک انصاف کے سندھ اسمبلی میں موجود پارلیمانی لیڈر خرم شیر زمان بھی اس مہم کے حامی نکلے۔

شاہی سید نے کہا کہ  تین روزہ بائیکاٹ مہم ذخیرہ اندوزوں کے خلاف ہے اس ہڑتال کی کال عوام نے دی ہے اس لیئے میں ضروری سمجھتا ہوں کہ ذخیرہ اندوز مافیا کے خلاف میں بھی اس ہڑتال میں شامل ہو جاﺅں اگلے تین دن تک نہ تو فروٹ خریدوں گا اور نہ ہی کھاﺅں گا ،جب عوام اٹھ جاتی ہے تو بڑے بڑے بت خود بخود گر جاتے ہیں ،یہ پہلی ہڑتال ہے جو کسی سیاسی جماعت نے نہیں بلکہ عوام نے شروع کی ہے ،اس لیئے اس کی کامیابی انتہائی ضروری ہے۔

خرم شیر زمان نے بھی عوام کا ساتھ دیتے ہوئے پھل نہ خریدنے کا اعلان کیا، جبکہ پی ایس پی قیادت نے بھی اس مہم کو کامیاب بنانے کے لیے تیار ہیں۔

اپنا تبصرہ بھیجیں: