پی ایس ایل فائنل، غلط تاثر نہ دیں اور اپنی اصلاح کریں۔۔ تحریر: احمد اشفاق

سن 1992 سے 1997 تک کراچی میں ایم کیو ایم کے خلاف بدترین آپریشن جاری تھا، شہر میں امن و امان کی صورت حال انتہائی خراب تھی، اس کے باوجود 1994 میں آسٹریلیا اور 1998 میں ویسٹ انڈیز نے یہاں ٹیسٹ سیریز کھیلی- 1996 کا ورلڈ کپ بھی ہو گیا- 1996 میں ساؤتھ افریقہ اور 1997 میں بھارت نے ون ڈے بھی کھیل لیا-

2002 میں نیوزی لینڈ کی ٹیم ایک بم دھماکے کے بعد دورہ مختصر کر کے کراچی ٹیسٹ میچ بنا کھیلے چلی گئی، اتنے بڑے حادثے کے بعد بھی یہاں ساؤتھ افریقہ ، انگلینڈ ، ویسٹ انڈیز ، سری لنکا، بنگلہ دیش اور بھارت جیسی ٹیمیں آتی رہیں-

ٹیسٹ بھی ہوئے اور ون ڈے میچز بھی- نیشنل اسٹیڈیم کراچی نے 2008 ایشیا کپ کے فائنل کی میزبانی بھی کی، 2009 میں سری لنکن ٹیم نے یہاں پر دو ون ڈے میچز کھیلنے کے بعد ایک ٹیسٹ میچ کھیلا اور دوسرے ٹیسٹ میچ کے لئے لاہور پہنچی- لاہور میں جو کچھ ہوا اس کے بعد انٹرنیشنل کرکٹ پاکستان سے روٹھ گئی، کیا ہوا تھا یہ آپ جانتے ہیں-

کراچی میں بسنے والے ایم کیو ایم مخالفین اور کراچی سے باہر بسنے والوں، آپ آج کراچی میں ہونے والے پی ایس ایل فائنل کے لئے بے حد پر جوش ہیں- اتنے پرجوش کہ اپنے جذبات پر قابو ہی نہیں رکھ پا رہے- آپ کل کے فائنل کے لئے رینجرز اور قانون نافذ کرنے والوں کا شکریہ ادا کر رہے ہیں اور ایم کیو ایم کے خاتمے کو شہر میں کھیلوں کی پر امن بحالی کی وجہ بتا رہے ہیں-

اگر آپ کو اللہ نے عقل دی ہے تو گھٹنوں پر زور دیں، اگر ماں باپ نے انٹرنیٹ دیا ہے تو استعمال کریں اور جان لیں کہ کراچی شہر بد ترین حالات میں بھی کرکٹ یا دیگر کھیلوں کے لئے غیر محفوظ نہیں رہا-

ایم کیو ایم زیر عتاب تھی تب بھی یہاں کرکٹ ہوئی، ایم کیو ایم برسر اقتدار تھی تب بھی یہاں بڑی شان سے نیشنل اسٹیڈیم آباد کیا گیا- آپ ایم کیو ایم کو تو بہت آسانی سے برا کہتے ہیں، ذرا لشکر جھنگوی سے سوال کیجئے کہ ان پر سری لنکن ٹیم حملے کا الزام ہے- کبھی جماعت اسلامی سے تو پوچھیے کہ اس حملے کا ماسٹر مائنڈ منصورہ میں کیوں اور کیسے رکا؟ کبھی امن کمیٹی سے تو سوال کیجئے کہ انہوں نے 2009 کے بعد شہر کو اتنا غیر محفوظ بنا دیا کہ لیاری ہی میں باکسنگ کے فروغ میں مشکلات آ گئیں-

کبھی حکومت سے پوچھیے کہ نیوی افسران کے سر کاٹ کر سہراب گوٹھ کے پل پر لٹکا دینے والے طالبان کہاں سے آئے تھے؟ کیا انہوں نے نیشنل اسٹیڈیم آباد کرنے کی اجازت دے رکھی تھی اور آپ کو صرف ایم کیو ایم کا ڈر تھا ؟ کبھی قانون نافذ کرنے والوں سے بھی سوال کر لیجئے کہ پورے پاکستان میں ہونے والے تمام دہشت گرد حملے اور کراچی ائیرپورٹ سے لے کر جی ایچ کیو ، کامرہ ایئر بیس سے لے کر پی این ایس مہران اور اے پی ایس سے لے کر باچا خان یونیورسٹی تک جو حملے ہوئے وہ کون سی ایم کیو ایم نے کیے؟ اور آخر کر کیسے دیے؟ ازراہ کرم کراچی کے خلاف منفی سازشیں بند کریں۔

ہمارا فیس بک پیج لائک کریں: https://www.facebook.com/ZarayeNews/

ٹوئٹر فالو کریں: https://twitter.com/ZarayeNews


خبر کو عام عوام تک پہنچانے میں ہمارا ساتھ دیں، صارفین کے کمنٹس سے ادارے کا کوئی تعلق نہیں ہے۔

اپنا تبصرہ بھیجیں: