کراچی کی آبادی کم دکھانے کا معاملہ اقوام متحدہ میں اٹھ گیا

واشنگٹن: مردم شماری میں کراچی کی آبادی گھٹانے کا معاملہ اقوامِ متحدہ کے اجلاس میں اٹھ گیا۔

تفصیلات کے مطابق انسانی حقوق کے سالانہ اجلاس میں انسانی حقوق کے سرگرم رکن عادل غفار ایڈوکیٹ نے سیشن میں کراچی مردم شماری میں آبادی کو گھٹانے اور صحیح تعداد نہ بتانے کے معاملے کو اجاگر کیا۔

عادل غفار ایڈوکیٹ نے کہا کہ مردم شماری میں سازش کے تحت مہاجر آبادی کو 50 فیصد کم کر کے دکھایا گیا، جس کی وجہ سے شہریوں میں بے چینی بڑھتی جارہی ہے۔

انہوں نے مطالبہ کیا کہ اقوام متحدہ ایک ٹیم تشکیل دے کر کراچی میں ریفرنڈم کروائے تاکہ کراچی کی صحیح آبادی سامنے آسکے اور عوام کا دیرینہ مطالبہ پورا کیا جائے۔

یاد رہے کہ جنیوا کا سالانہ اجلاس 18 ستمبر سے جاری ہے جس میں دنیا بھر کے ممالک میں پیش آنے والے مسائل اجاگر کیے جارہے ہیں، بلوچ علیحدگی پسندوں نے وزیراعظم پاکستان کی آمد سے قبل ملک مخالف ریلی بھی نکالی جس کے بارے میں پاکستانی حکام کا کہنا ہے کہ وہ بھارت کی مدد سے نکالی گئی۔

اپنا تبصرہ بھیجیں: