خاتون کا شوہر اور نندوں سے بھیانک انتقام، 56 خواتین اور بچوں کو زندہ جلا ڈالا

کویت میں ایک خاتون نے شوہر اور نندوں سے انتقام لینے کے لئے 56 خواتین اور بچوں کو پٹرول چھڑک کر زندہ جلا ڈالا۔

کویت کی سرکاری خبر رساں ایجنسی کے مطابق 3 روز قبل قتل کا جرم ثابت ہونے پر تین خواتین کے فیصلوں پر عمل درآمد کیا گیا جن میں سے ایک خاتون نصرہ یوسف محمد العنزی کی اعتراف جرم کی کہانی اس قدر بھیانک ہے کہ جسے سن کر خوف طاری ہو جائے۔

نصرہ یوسف کے شوہر نے اس کے سامنے دوسری شادی کی خواہش ظاہر کی تو اس نے اسی وقت اپنے شوہر اور سوکن سے انتقام لینے کا تہیہ کر لیا۔
نصرہ کے شوہر نے جب 2009 میں دوسری شاید کی کوشش کی تو نصرہ نے شادی والے روز تقریب کے لیے نصب شامیانے پر پٹرول چھڑک کر آگ لگا دی جس کے نتیجے میں شامیانے کے اندر موجود 56 خواتین اور بچے ہمیشہ کے لئے موت کی آغوش میں چلے گئے۔

نصرہ یوسف نے عدالت میں اپنے جرم کا اقرار کرتے ہوئے بتایا کہ اس فعل کے پیچھے شوہر سے انتقام کا جذبہ کار فرما تھا کیوںکہ جب نندوں نے اسے سسرال سے نکالا تو اس وقت شوہر اپنی بہنوں کے سامنے بھیگی بلی بن گیا تھا۔ نصرہ نے مزید بتایا کہ مجھے نکالنے کے بعد نندوں نے اپنے بھائی کی دوسری شادی کا فیصلہ کر کے میری اور میرے بچے کو لاوارث چھوڑ دیا تھا جس کا انتقام لینے کے لئے میں موقع کی تلاش میں تھی۔

اپنا تبصرہ بھیجیں:

اپنا تبصرہ بھیجیں